Home | Short Notes | Videos | Muslim Scholars | About | Contact

اسلام کے خلاف علمی چالبازیاں

تحریر: محمد نوح (www.CoislamScience.com)

اس وقت دین اسلام کے خلاف مکمل طور پر مختلف طور پر حملے کیے جارہے ہیں۔ کہیں کھلے عام اور کہیں انتہائی چالاکی سے اور کہیں علمی تکبر کی جہالت میں۔

مثال کے طور پر

ایک طبقہ کئی صدیوں سے مسلمانوں کو آپس میں فرقہ فرقہ کرکے لڑوانے میں مصروف رہا اور عام فرقہ پرست مسلمان ایک دوسرے کو کافر و مشرک قرار دینے میں برباد ہوگئے۔

مسلمانوں کی اکثریت ان پر ہی مشتمل ہے اور یہ ایک دوسرے کے دشمن بنے رہتے ہیں۔ ایک دوسرے کو ہی مسلم بنانے پر کوششیں کرتے رہتے ہیں۔ ایک دوسرے کے خلاف ہی مورچے بنائے رکھتے ہیں۔ جس کے سبب اسلام کی تبلیغ و سچائی کا وہ کام جسے روئے زمین پر 5 ارب کفار تک پہنچانا ضروری تھا وہ نہ صرف کم ہوگیا بلکہ ان فرقہ پرستوں کے سبب نئے مسلم ہونے والے غیرمسلم بھی کنفیوز ہوجاتے ہیں کہ کس فرقے کا اسلام درست ہے۔

دوسری جانب ان فرقہ پرست مسلمانوں کے کردار کو دیکھ کر غیرمسلم اسلام سے مزید بے زار رہتے ہیں۔

ایک طبقہ ملحدین کا ہے جو خود کو خدا بے زار کہنے کے دعویدار ہیں لیکن یہ خدا کے موضوع پر بحث بھی چسکے لے لے کر کرتے ہیں۔ اسی طرح ملحدین کا طبقہ قرآن و احادیث کو جھوٹا مانتا ہے لیکن دوسری جانب اسی قرآن و احادیث سے من پسند باتیں پکڑ کر سوالات کرتے ہیں تاکہ مسلمانوں کے ایمان کی دیوار میں شک کی دراڑیں پیدا کردیں۔

عقل سے سوچنے کی بات ہے کہ جب انہیں ایک چیز پر بھروسا ہی نہیں تو سوال اور بحث کس بات پر؟

جبکہ یہ اپنے مفاد کے خلاف قرآن و احادیث کی باتیں جھٹلاتے ہیں، کتراتے ہیں اور نظر انداز کرتے ہیں یہاں تک کہ مذاق اڑانے لگتے ہیں۔

وہاں یہ سوالات و بحث کرنے سے بھی بھاگتے ہیں کیونکہ یہ خوب جانتے ہیں کہ بصورت دیگر انہیں "عقل" کی بات ماننا پڑے گی اور شکست خوردہ ہوکر اللہ کو مان کر اسلام میں داخل ہونا پڑے گا۔ جو یہ دل سے چاہتے ہی نہیں کیونکہ ان کے نفس پابندی سے فرار کے لیے ہی اسلام سے آزادی لے کر نکلے تاکہ شیطانی ذندگی گزار سکیں۔

ایک طبقہ وہ ہے جو فرقہ پرستوں سے ہٹ کر صرف قرآن و احادیث کے نعرے کے ساتھ فرقہ پرستوں کے خلاف کام کرتا ہے اور مسلمانوں کی اصلاح کا کام کرتا ہے لیکن یہ طبقہ مسلمانوں کی برین واشنگ کرکے انہیں ادب کے دائرے سے نکال کر بے ادب بنارہا ہے کہ مسلمانوں کے دلوں سے صحابہ کرام، ائمہ کرام، اولیائے کرام و شہدائے اسلام کی عزت ختم کردی جائے اور عقل سے سجھ نہ آنے والے معجزات و کرامات پر یقین ختم کردے۔

جبکہ یہی طبقہ عقل کے بل بوتے پر سمجھ نہ آنے والے قرآن و احادیث میں موجود معجزات کو ملحدین کے سامنے منوانے کے لیے ناکام رہتا ہے کیونکہ ملحدین بھی اسی لاجک سے قرآن و احادیث کے تمام واقعات کا انکار کرکے مذاق اڑاتے ہیں جس لاجک سے یہ قرآنی و حدیثی مسلم مسلمانوں کی دیگر تمام کتابوں میں موجود معجزات و کرامات کا انکار کرکے مذاق اڑاتے ہیں۔

ایک طبقہ وہ ہے جو صرف قرآن کی رٹ لگاتا ہے اور احادیث کا منکر ہے۔ یہ بھی بہت چالاکی سے مسلمانوں کے دلوں سے احادیث پر یقین ختم کررہا ہے۔

ایک طبقہ قرآن پر شک ڈالنے کا کام کررہا ہے اور جاہل مسلمانوں کو عربی سے کھیل کر اپنا گرویدہ بناکر کفر میں لے جارہا ہے۔

Home | Short Notes | Videos | Muslim Scholars | About | Contact