Home | Short Notes | Videos | Muslim Scholars | About | Contact

صحیح احادیث پر یقین ڈگمگارہے ہیں

تحریر: محمد نوح (www.CoislamScience.com)

مسلمانوں کے معاشرے میں ایک نئی وبا پھیل چکی ہے کہ وہ صحیح احادیث کو نہیں مانتے۔

یہ حال نوجوانوں کا ہے جو اپنے طور پر تحقیقات کرنے کی کوشش کرتے ہیں۔ قرآن و حدیث کے بنیادی علوم سے بھی جاہل ہیں لیکن قرآن و احادیث پر مشتمل چند موبائل ایپس انسٹال کرکے کسی بھی ملحد سے کوئی حدیث سن کر شک میں پڑجاتے ہیں۔

یہ نوجوان قرآن کی حد تک ایمان رکھ رہے ہیں لیکن احادیث مبارکہ ان کے لیے اہمیت کھورہی ہیں۔ چاروں ائمہ کرام اہمیت کھورہے ہیں۔

مسلم علمائے سو اور فرقہ پرستی کے زہر سے ڈستے ہوئے تلاش حق میں متلاشی یہ مسلم پریشانیوں سے تنگ آکر خود اجتہادی بن کر سچ اور جھوٹ سمجھنے کی کوشش کررہے ہیں۔

گوگل، یوٹیوب اور فیس بک کی آزادی سے ایک طرف وہ لوگ ہیں جنہوں نے مسلمانوں کو گمراہ کرنے کی ٹھان رکھی ہے۔ دوسری طرف وہ لوگ ہیں جو ان بہت سے نئے لوگوں کی باتوں کو سنتے رہتے ہیں۔

جب ایمان کے درخت کی جڑیں ہی کھوکھلی ہوچکی ہوں تو کوئی جاہل بھی آکر ایسے کھوکھلے ایمانی درخت کو جڑ سے کاٹ سکتا ہے۔

Home | Short Notes | Videos | Muslim Scholars | About | Contact